15 رمضان المبارک ولادت پاک حضرت سیدنا امام حسن المجتبیٰ رضی اللہ تعالی عنہ۔۔۔maulana Sajid Alam ashrafi ...

15 رمضان المبارک جشن ولادت پاک
ﺳﯿﺪﺍﻻﺳﺨﯿﺎ، ﺍﻣﺎﻡ ﺍﻻﻭﻟﯿﺎ، ﺻﺎﺣﺐِ ﺟﻮﺩ ﻭﺳﺨﺎ، ﻧﻮﺭِ ﻧﻈﺮ ﺳﯿﺪۃ ﺍﻟﻨﺴﺎﺀ، ﺟﮕﺮﮔﻮﺷﮧٔ ﻋﻠﯽ ﺍﻟﻤﺮﺗﻀﯽ، ﺭﺍﮐﺐ ﺩﻭﺵِ ﻣﺼﻄﻔﯽٰﷺ، ﺍﻣﺎﻡ ﺍﻟﻤﺴﻠﻤﯿﻦ, امیرالمومنین, رونق بزم عترت, خاتم مسند خلافت, نازش مرتضیٰ, جگر گوشۂ فاطمہ زہرا, سید شباب اہل الجنتہ, *حضرت سیدنا امام حسن مجتبیٰ* رضی اللہ عنہ
بہت بہت مبارک ہو! 🌹🌹🌹🌹🌹

*لاڈلے مصطفیٰ  کے حسن اور حسین*
*ان جوانان  جنت  پہ  لاکھوں  سلام*

                *تعارف*
ﺍﺳﻢِ ﮔﺮﺍﻣﯽ : ﺣﺴﻦ۔  ﮐﻨﯿﺖ: ﺍﺑﻮ ﻣﺤﻤﺪ۔
ﺍﻟﻘﺎﺏ : ﺗﻘﯽ, ﻧﻘﯽ, ذﮐﯽ, مجتبیٰ, ﺳﯿﺪ ﺷﺒﺎﺏ ﺍﮨﻞ الجنتہ, ﺳﺒﻂِ ﺭﺳﻮﻝ, ﺟﻮﺍﺩ, ﮐﺮﯾﻢ, ﺷﺒﯿﮧ ﺍﻟﺮﺳﻮﻝ, ﺭﯾﺤﺎنتہ ﺍﻟﻨﺒﯽ۔

*ﻭﻻﺩﺕ پاک:* 15رمضان المبارک کو ہجرت کے تیسرے سال مدینہ منورہ میں آپ کی ولادت باسعادت ہوئی۔
آپ کے نانا جان ﺳﺮﻭﺭِ ﮐﻮﻧﯿﻦ ﷺ ﮐﻮ جب یہ ﺧﻮﺷﺨﺒﺮﯼ ﺩﯼ ﮔﺌﯽ تو آپ ﷺ بہت خوش ہوئے, ﻓﻮرﺍً ﺗﺸﺮﯾﻒ ﻻﺋﮯ ﺩﺍﮨﻨﮯ ﮐﺎﻥ ﻣﯿﮟ اﺫﺍﻥ, ﺍﻭﺭ ﺑﺎﺋﯿﮟ ﮐﺎﻥ ﻣﯿﮟ ﺗﮑﺒﯿﺮ پڑھی اور اپنا ﻟﻌﺎﺏِ ﺩﮨﻦ ﻋﻄﺎ ﮐﯿﺎ۔
رسول اکرم ﷺ کے گھر میں آپ کی پیدائش اپنی نوعیت کی پہلی خوشی تھی۔
حضرت امام حسن رضی اللہ عنہ کی پیدائش مدینہ منورہ میں گویا سورہ کوثر کی پہلی تفسیر تھی۔
جب مکہ معظمہ میں رسول اللہ ﷺ کے شہزادے یکے بعد دیگرے دنیا سے رخصت ہوگئے اور سوائے لڑکی کے آپ کی اولاد میں کوئی نہ رہا تو مشرکین مکہ طعنہ دینے لگے تو آپ ﷺ کو بڑا صدمہ پہنچا۔
خالق کائنات جل جلالہ کو اپنے پیارے محبوب ﷺ کا اداس ہونا کیسے گوارہ ہوتا آپ کی تسلّی کے لیے قران مجید میں سورۂ کوثر نازل فرمادیا۔ جس میں آپ کو خوش خبری دی گئی کہ خدا نے آپ کو کثرتِ اولاد عطا فرمائی ہے اور مقطوع النسل آپ نہیں بلکہ آپ کا دشمن ہوگا۔
دنیا جانتی ہیکہ امام حسن اور ان کے چھوٹے بھائی امام حسین علیہما السّلام کے ذریعہ ہی رسول اللہ ﷺ کی اولاد میں وہ کثرت ہوئی کہ باوجود ان کوششوں کے جو ہمیشہ دشمنوں کی طرف سے اس خاندان پاک کے ختم کرنے کے لئے ہوتی رہیں جن میں ہزاروں کو سولی دے دی گئی, ہزاروں تلواروں سے شہید کیے گئے اور ہزاروں کو زہر دیا گیا۔ اس کے باوجود آج بھی دُنیا آلِ رسول ﷺ کی نسل سے لہلہا رہی ہے۔ دنیا کا کوئی گوشہ مشکل سے ایسا ہوگا جہاں اس خاندان پاک کے افراد موجود نہ ہوں۔
جبکہ رسول اللہ ﷺ اور ان کے خاندان پاک کے دشمن ہمیشہ برباد تھے برباد ہیں اور برباد ہوتے رہینگے ان شاء اللہ تعالیٰ۔
یہ ہے قرآن پاک کی سچائی اور رسول خدا ﷺ کی صداقت کا زندہ ثبوت جو دنیا کی آنکھوں کے سامنے ہمیشہ کے لیے موجود ہے۔

قربان جاؤں اس پاک ہستی پہ کہ جن کی پہلی خوراک دونوں عالم کے مالک و مختار روحی فداہ ﷺ کا شہد سے زیادہ شیریں اور دنیا کی تمام غذاؤں سے بہتر لعاب دہن ہو۔
جن کے برادر سیدالشہداء, ﻭﺍﻟﺪ گرامی ﺳﯿﺪﺍﻻﻭﻟﯿﺎء, ﻭﺍﻟﺪﮦ محترمہ ﺳﯿﺪۃ ﺍﻟﻨﺴﺎﺀ علیہم السلام اور جن کے ﻧﺎﻧﺎ جان ﺳﯿﺪﺍﻻﻧﺒﯿﺎﺀ ﷺ ہیں۔

*ﺳﯿﺮﺕ ﻭﺧﺼﺎﺋﺺ:* آپ رضی اللہ عنہ بارہ اماموں میں سے دوسرے امام ہیں نیز خلفائے راشدین میں سے آخری خلیفہ ہیں۔
 آپ رضی اللہ عنہ ﺑﮍﮮ ﺣﻠﯿﻢ, ﺳﻠﯿﻢ, ﮐﺮﯾﻢ, ﻣﻨﮑﺴﺮ, ﺻﺎﺑﺮ, ﻣﺘﻮﮐﻞ ﺍﻭﺭ ﺑﺎ ﻭﻗﺎﺭ شخصیت کے مالک تھے، ﺍٓﭖ رضی اللہ عنہ ﺳﺮﻭﺭِ ﻋﺎﻟﻢﷺ ﮐﮯ ﻓﺮﻣﺎﻥ ﮐﮯ ﻣﻄﺎﺑﻖ ﺍٓﺧﺮﯼ ﺧﻠﯿﻔﮧٔ ﺭﺍﺷﺪ ﮨﯿﮟ۔
حضرت امام عالی مقام رضی اللہ عنہ نے چھ سال چار ماہ اپنے نانا جان معلم کائنات ﷺ سے تربیت پائی اور تقریباً سات سال اپنی والدہ محترمہ سیدہ خاتون جنت سلام اللہ علیہا کی آغوش مبارک میں پرورش پائی اور تقریباً 37 سال اپنے والد ماجد حیدر کرار خیبر شکن امام المسلمین حضرت سیدنا مولیٰ علی کرم اللہ وجہہ الکریم کے فیوض وبرکات سے مستفیض ہوتے رہے۔
ﺣﻀﺮﺕ ﺍﻣﺎﻡ ﺣﺴﻦ ﺭﺿﯽ ﺍﻟﻠﮧ ﻋﻨﮧ ﺳﺮ ﺳﮯ ﺳﯿﻨﮧ ﺗﮏ ﺭﺳﻮﻝ ﺍﻟﻠﮧ ﷺ ﮐﮯ ﺑﮩﺖ ﺯﯾﺎﺩ ﻣﺸﺎﺑﮧ ﺗﮭﮯ، ﺍﻭﺭ ﺣﻀﺮﺕ ﺍﻣﺎﻡ ﺣﺴﯿﻦ ﺭﺿﯽ ﺍﻟﻠﮧ ﻋﻨﮧ ﺳﯿﻨﮯ ﺳﮯ ﻧﯿﭽﮯ ﺗﮏ ﺑﮩﺖ ﺯﯾﺎﺩﮦ ﻣﺸﺎﺑﮧ ﺗﮭﮯ۔
ﺍٓﭖ ﻧﮯ ﭘﭽﯿﺲ ﺣﺞ ﭘﯿﺪﻝ ﮐﯿﮯ۔
ﺑﮩﺖ ﺳﺨﯽ ﺗﮭﮯ۔ ﮐﺌﯽ ﻣﺮﺗﺒﮧ ﺍﭘﻨﮯ ﮔﮭﺮ ﮐﺎ ﺳﺎﺭﺍ ﺳﺎﻣﺎﻥ ﺍﻟﻠﮧ کی ﺭﺍﮦ ﻣﯿﮟ ﺗﺼﺪﻕ ﮐﺮﺩﯾﺎ۔

*خصوصی التجا:* راکب دوش مصطفیٰ ﷺ کی بارگاہ اقدس میں خوب خوب نیاز پیش کریں۔
اللہ رب العزت ہمیں حضرت امام حسن رضی اللہ عنہ کا صدقہ عطا فرماکر جنت الفردوس میں ان کا پڑوس نصیب فرمائے۔
آمین بجاہ سیدالمرسلین ﷺ
         -------------------------------

پیشکش۔ *فیضان اشرف الاولیاء* گروپ

✍🏻 گدائے اشرف الاولیاء
محمد ساجد حسین اشرفی
Share on Google Plus

About Md Firoz Alam

Ut wisi enim ad minim veniam, quis nostrud exerci tation ullamcorper suscipit lobortis nisl ut aliquip ex ea commodo consequat. Duis autem vel eum iriure dolor in hendrerit in vulputate velit esse molestie consequat, vel illum dolore eu feugiat nulla facilisis at vero eros et accumsan et iusto odio dignissim qui blandit praesent luptatum zzril delenit augue duis.

0 تبصرے:

ایک تبصرہ شائع کریں